پاکستانی پروڈیوسر حسن حیات نے پوری قوم کا سرفخر سے بلند کردیا

اسلام آباد (پی کے نیوز) ایشین برڈ کاسٹ یونین کے ایوار ڈ ز،پاکستانی پروڈیوسرحسن حیات کی مسلسل دوسری کامیابی، دستاویزی فلم ”Climate of the coast“دوسری بہترین فلم قرار،پروڈیوسر حسن حیات پی ٹی وی کے ساتھ منسلک ہیں ،تعلق آزادکشمیر کے ضلع باغ سے ہے، سماجی و عوامی حلقوں کی مبارکباد
‘تفصیلات کے مطابق پاکستانی پروڈیوسر حسن حیات کی دستاویزی فلم ”Climate of the coast“ ایشین براڈ

کاسٹ یونین کے ایوارڈز میں دوسری بہترین فلم قرار پائی ہے ، ماحولیاتی تبدیلیوں اور ڈیزاسٹر رسک رڈیکسشن پر ایشین براڈ کاسٹ یونین کی تیسری عالمی میڈیا کانفرنسبنگلادیش کے شہر ڈھاکہ میں 12 سے 17مئی کے درمیان منعقد ہوئی ، جس میں دنیا بھر سے 200 کے قریب میڈیا پرسنز اور ماہرین ماحولیات نے شرکت کی ، اس موقع پر ماحولیاتی تبدیلیوں پر بنائی گئی دستاویزی فلموں کی ایوارڈ ز سے نوازا گیا ، دستاویزی فلموں کے مقابلے لے لئے دنیا بھر سے 34نامزدگیاں موصول ہوئیں ، جن ممالک سے نامزدگیا ں موصول ہوئیں ان میں چین ، بھارت ، جاپان ، بنگلادیش، انڈونشیا،ملائشیا، برطانیہ اور دیگر اہم ممالک شامل ہیں ،ماہرین ماحولیات پر مشتمل جیوری نے فائنل راؤنڈ کے لیے 3 دستاویزی فلموں کا انتخاب کیا ، جن 3 بہترین دستاویزی فلموں کا انتخاب کیا گیا ان میں پاکستانی پروڈیوسر حسن حیات جن کا تعلق پی ٹی وی سے ہے کی دستاویزی فلم Climate of the coast دوسری بہترین فلم قرارپائی ،فلم Climate of the coastسات سو ساٹھ کلو میٹر طویل بلوچستان کے ساحلی اضلاع لس بیلہ اور گواردر میں  فلمائی گئی، اس میں بلوچستان کے ان دور افتادہ اضلاع میں ماحولیاتی تبدیلیوں انسانی زندگی پر اثرات کو موضوع بنایا گیا ہےاور لوگوں کو درپیش مشکلات کی عکس بندی کی گئی ، یہ دستاویزی فلم ایک ماہ سے کم عرصے میں تیار کی گئیی،روڈیوسر حسن حیات پاکستان ٹیلی وژن کے ساتھ منسلک

ہیں ،ان کی دستاویزی فلمLiving with Change ایشین براڈ کاسٹ یونین کے گزشتہ سال ہونے والے ایوارڈز میں رنرزاپ رہی ہے، ان کی ایک اور دستاویزی فلم خانہ بدوش بکروال “ اس سے قبل جاپان میں ہونیوالے عالمی مقابلے کے لیے نامزد ہوچکی ہے،حسن حیات کا تعلق آزاد کشمیر کے ضلع باغ کے پسماندہ گاؤں سارمنڈل سے ہے ،سماجی اوررعوامی حلقوں نے اس شاندار کامیابی پر حسن حیات کو مبارکباد دی ہے ،انہوں نے حکومت سے

مطالبہ کیا ہے کہ پاکستانی پروڈیوسر کی اس کامیابی پر سرکاری سطح پر ان کی حوصلہ افزائی کی جائے ۔
واضع رہے کہ صوبہ بلوچستان موسمیاتی تبدیلیوں کی وجہ سے بری طرح متاثر ہے ، بلوچستان کے ساحلی علاقے کھارے پانی کو میٹھے پانی میں امیزیش کی وجہ سے زیر زمین پانی کے کھارا ہونے ، سمندری کٹائو سے ساحلی علاقو ں کے نقصانات ، سمندری طوفانوں ، ریت کے طوفانوں اور برساتی سیلابوں کے باعث سب سے

زیادہ متاثر ہیں ، یہ دستاویزی فلم حکومت اور بین القوامی توجہ مبذول کروانے کی بہترین کوشش ہے ، دستاویزی فلم ایک ماہ سے کم عرصے میں تیار کی گئی