ورلڈ کپ میں قومی ٹیم کا کپتان کون ہوگا، سرفراز احمد کے بعد چیئرمین پی سی بی احسان مانی نے کوئی اور کہانی سناڈالی

لاہور (نیوز ڈیسک)پاکستان کرکٹ بورڈ( پی سی بی) کے چیئرمین احسان مانی نے کہا ہے کہ ورلڈ کپ کیلئے سرفراز احمد کو کپتان برقرار رکھنے کا فیصلہ نہیں ہوا۔ لاہور میںقائد اعظم ٹرافی کے فائنل کے بعد صحافیوں سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ کپتان سے متعلق فیصلہ کرنے کا اختیار سلیکشن کمیٹی کے پاس ہے اور وقت آنے پر اس معاملے کو دیکھیں گے تاہم اگر سلیکشن کمیٹی سفارش کرے گی تو غور کیا جا سکتا ہے۔اس وقت قومی ٹیم متحدہ عرب امارات( یو اے ای) میں نیوزی لینڈ کیخلاف سیریز کھیلنے میں مصروف ہے جس کے بعد بھی اہم ایونٹس ہیں۔ورلڈ کپ سے قبل انگلینڈ میں ون ڈے سیریز کھیلنے سے گرین شرٹس کو فائدہ ہوگا۔ احسان مانی کے مطابق یہ تاثر غلط

ہے کہ اظہر علی سے سرفراز احمد کی جگہ ٹیسٹ ٹیم کا کپتان بنانے کیلئے ریٹائرمنٹ لی گئی۔درحقیقت ون ڈے کرکٹ کو خیر باد کہنے کا فیصلہ ان کا ذاتی ہے۔انہوں نے کہا کہ جسٹس قیوم رپورٹ کے حوالے سے سیاق و سباق سے ہٹ کر بات کی گئی۔ رپورٹ میں سابق کپتان وسیم اکر م کو عہدہ دینے کے حوالے سے کوئی ممانعت نہیں ہے ، دوہری ذمہ داریوں کے حوالے سے پالیسی بنائی جا رہی ہے۔ جن کوچز اور دوسرے عہدیداروں کے معاہدے ہو چکے۔ ان کو راتوں رات ختم نہیں کیا جا سکتا۔ان کا کہنا تھا کہ دنیا بھر میں کرکٹ کمیٹیاں کام کرتی ہیں، اس طرز کی کمیٹیاں تجاویز دینے کیلئے بنائی جاتی ہیں تاہم محسن حسن خان اور ہیڈ کوچ مکی آرتھر تنازع پر بات نہیں کروں گا۔احسان مانی نے مزید کہا کہ سابق کپتان سلمان بٹ کی سلیکشن سے کسی کو نہیں روکا، ان کو قومی سکواڈ کا حصہ بنانے یا نہ بنانے کا اختیار سلیکشن کمیٹی کے پاس ہے۔