جنوبی افریقہ کیخلاف سیریزمیں ناقص کارکردگی، امام الحق نے اپنی ناکامی کا ساراملبہ کس پرڈال دیا

جوہانسبرگ(نیوز ڈیسک) قومی ٹیم کے اوپنر امام الحق نے جنو بی افریقہ کے خلاف ٹیسٹ سیریز میں اپنی ناکامی کا ملبہ ”پچ“ پر ڈال دیا ۔ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے 23سالہ امام الحق کاکہنا تھا کہ اوپنرزکوہمیشہ جنوبی افریقہ میں مسئلہ ہوتا ہے، باؤنسرزکامسئلہ حل کرلیا ہے تاہم اب آف سٹمپ پردشواری کا سامنا کررہا ہوں۔ان کا مزیدکہنا تھا کہ کوئی بھی کھلاڑی یہاں خوفزدہ ہوکر نہیں کھیل رہاہے ،ہم اس ٹورکے لیے 2 ماہ سے بہت محنت کررہے تھے، ہماری ٹیم دونوں میچوں کی دوسری اننگزمیں اچھا کھیلی ہے۔تیسرے ٹیسٹ کی پچ کے حوالے سے امام الحق کا کہنا تھا کہ وکٹ کودیکھا ہے ،تیسرے ٹیسٹ کی پچ اچھی لگ رہی ہے،آخری ٹیسٹ میچ جیتنے کے لیے بھرپورمحنت کریں گے۔یاد رہے کہ قومی ٹیم کے اوپننگ بلے باز امام الحق ٹیسٹ کرکٹ میں مکمل طور پر ناکام ثابت ہونے لگے ہیں ۔ چیف سلیکٹر انضمام الحق کے 23سالہ بھتیجے نے آئر لینڈ کے خلاف اپنے ٹیسٹ ڈیبیو پر دوسری اننگز میں

74رنز کی عمد ہ اننگز کھیلی تھی اور آسٹریلیا کے خلاف دبئی ٹیسٹ کی پہلی اننگز میں بھی76رنز سکور کیے تھے تاہم اس کے بعد سے ان کی بیٹنگ فارم کو گرہن لگ گیا ہے ،نوجوان اوپنر نے اپنی آخری 9ٹیسٹ اننگز میں8،6،0،57،9،22،9،6اور27 رنز سمیت 16کی اوسط سے 144رنز سکور کیے ہیں ۔وہ ابتک9ٹیسٹ میچز کی 17اننگز میں 27.00کی اوسط سے405رنز سکور کرچکے ہیں جن میں تین نصف سنچریاں شامل ہیں۔ پاکستان اور جنوبی افریقہ کے درمیان تیسرا اور آخری ٹیسٹ 11 سے 15 جنوری تک جوہانسبرگ کھیلا جائے گا، اس کے بعد دونوں ٹیموں کے درمیان ون ڈے انٹرنیشنل سیریز کا پہلا میچ 19 جنوری، دوسرا میچ 22 جنوری، تیسرا میچ 25 جنوری، چوتھا میچ 27 جنوری جب کہ پانچواں اور آخری میچ 30 جنوری کو کھیلا جائے گا، پاکستان اور جنوبی افریقہ کے درمیان پہلا ٹی ٹونٹی میچ یکم فروری، دوسرا میچ 3 فروری جب کہ تیسرا اور آخری میچ 6 فروری کو کھیلا جائے گا۔