مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی بدترین خلاف ورزیوں پر بھارت بے نقاب ہورہا ہے، سابق وزیراعظم آزاد کشمیر سردار عتیق

ساوتھ ہمپٹن(پی کے نیوز) آل جموںوکشمیر مسلم کانفرنس کے صدر اور سابق وزیر اعظم سردار عتیق احمد خان نے کہا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی بدترین خلاف ورزیوں پر بھارت بے نقاب ہورہا ہے اور یورپ اور برطانیہ کے ایوانوں میں اس ظلم وانصافی کے خلاف آواز بلند ہونا شروع ہوگی ہے ،وہ گزشتہ روزمسلم کانفرنس برطانیہ کے سینئررہنما چوہدری زیارت حسین کی طرف سے دئیے گئے اعزاد میں استقبالیے تقریب سے خطاب کررہے تھے اس موقع پر مقامی رکن پارلیمنٹ این وائٹ ہیڈ اور ساوتھ ہمپٹن کے مسٹر سٹفن وانس نے بھی خطاب کیا استقبالے میں کشمیری،پاکستانی اور چیدہ چیدہ شخصیات نے بھی شرکت کی ۔سردار عتیق احمد خان نے کہا کہ کشمیریوں کی قربانیاں رنگ لارہی ہیں اور دنیا اب مقبوضہ کمشیر میں ہونے والے مظالم سے آگاہ ہو کر اس پرآواز اُٹھائی ہے برطانیہ کے ہائوس آف

کا مرس میں ہونے والی کشمیر کانفرنس اور جامع قرادارکی منظوری اس کا اہم ثبوت ہے ۔انہوں نے کہا کہ اس طرح دوسرے یورپی ملکوں کے جمہوری ایوانوں میں بھی کشمیریوں کے حق میں آواز اُٹھ رہی ہے انہوں نے کہا کہ اس بدلتی ہوئی صورتحال سے بھرپور فائدہ اُٹھانا چاہیے تاکہ مسئلہ کشمیر کے حل کے لیے تیسرے فریق کو آگے بڑھ کر اپنا کر دار ادا کرنے کا موقع مل سکے۔انہوں نے کہا کہ اقوام متحدہ کی مداخلت کے بغیر تنازعہ کا حل ممکن نہیں کیونکہ اقوام متحدہ اس مسئلے کا اہم وتیسرا فریق ہے اور اسے خود بھارتی لیڈروں نے تیسرا فریق بنایا ہے اب وہ اس حقیقت سے انکار نہیں کرسکتے۔اس موقع مسلم کانفرنس کے مرکزی ڈپٹی چیف آرگنائزر سردار عثمان علی خان ، مسلم کانفرنس برطانیہ کے رہنما چوہدری بشیر رٹوی ،راجہ صابر اسحاق ،سردار امجد عباسی،عنیلہ چوہدری ودیگر شریک تھے۔