نازیبا بیان پر ایک وزیر کو گھر جانا پڑا، یہی نیا پاکستان ہے، رہنما تحریک انصاف خولہ خان

اسلام آباد(پی کے نیوز) تحریک انصاف کی رہنما خولہ خان نے کہا ہے کہ وزیر اعظم عمران خان کی طرف سے ہندووں کے حوالے سے نازیبا گفتگو کرنے پر پنجاب کے وزیر اطلاعات کو عہدے سے ہٹانا ایک اچھا فیصلہ ہے، اس فیصلے سے ملک کے اندر اور باہر بہت اچھا تاثر قائم ہوا ہے، عالمی سطح پر بھی اس فیصلے کو اچھے انداز سے دیکھا جارہا ہے، اس فیصلے سے پاکستان کا ایک معتدل تاثر قائم ہوگا، ان کا کہنا تھا کہ بھارت اور دیگر ممالک کو بھی اس طرح کے اقدامات اٹھانے چاہیں، پاکستان میں نازیبا

زبان استعمال کرنے پر پنجاب کابینہ کے وزیر کو عہدہ چھوڑنا پڑا، بھارت میں وزرا آئے روز مسلمانوں کے خلاف زہر اگلتے نظر آتے ہیں، لیکن ان کے خلاف کوئی کاروائی نہیں ہوتی، ان کا کہنا تھا کہ وزرا اور اعلی عہدوں پر فائز لوگوں کو کسی طرح کی فضول بیان بازی سے گریز کرنا چاہیے، لوگ انہیں فالو کرتے ہیں انہیں الفاظ سوچ سمجھ کر استعمال کرنے چاہیں ان کا کہنا تھا کہ یہی ہے نیا پاکستان جہاں اخلاق سے گری ہوئی بات کرنے پر ایک وزیر کو گھر جانا پڑا، نئے پاکستان میں جو غلط کرے گا بھگتے گا۔