پچیس سال سے کام کرنیوالی جرمن تنظیم نے پاکستان میں کام بند کرنے کا اعلان کردیا

برلن(نیوز ڈیسک)جرمن غیرسرکاری امدادی تنظیم ہائنرِش بوئل شٹفٹنگ (ایچ بی ایس )نے پاکستان میں سرگرمیاں روکنے کا اعلان کردیا ، اس تنظیم نے حکومتِ پاکستان کی جانب سے متعارف کروائے گئے نئے ضوابط کے تحت کام کرنے سے انکار کر دیا تھا۔ایچ بی ایس جرمنی کی گرین پارٹی سے وابستہ تنظیم ہے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق یہ تنظیم پاکستان میں گزشتہ 25 برس سے کام کر رہی تھی۔ابتدا میں اس تنظیم نے لاہور سے کام کا آغاز کیا تھا، جب کہ بعد میں اسلام آباد میں خدمات انجام دینا شروع کی تھیں۔ ایچ بی ایس جرمنی کی گرین پارٹی سے وابستہ تنظیم ہے۔مقامی میڈیا کے مطابق اس تنظیم کے الوداعی تقریب

سے خطاب کرتے ہوئے جرمن سفیر برائے پاکستان مارٹن کوبلر نے کہا کہ یہ تنظیم اور حکومت پاکستان قابلِ عمل فارمولے پر اتفاق میں ناکام رہے، جس کی وجہ سے اس تنظیم نے پاکستان میں کام بند کرنے کا فیصلہ کیا۔کوبلر نے مزید کہا کہ انہیں اس بات پر افسوس ہے کیوں کہ پاکستان وہ پہلا ملک ہے، جہاں اس تنظیم نے اپنی سرگرمیاں روکنے کا فیصلہ کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں سول سوسائٹی کے لیے جگہ میں کمی آتی جا رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ افسوس ناک عمل ہے کہ یہ ماحول دوست تنظیم ایک ایسے وقت میں پاکستان میں اپنی خدمات روک رہی ہے، جب پاکستان میں دس ارب پیڑ لگانے کا منصوبہ ترتیب دیا گیا ہے۔