قومی زرعی تحقیقاتی مرکز ، اسلام آبادمیں کونسل کی ایسوسی ایشن کے نو منتخب عہدیداران کی تقریب حلف برداری کا انعقاد

اسلام آباد ( نمائندہ خصوصی ) پاکستان زرعی تحقیقاتی کونسل کی ایسوسی ایشن کے نو منتخب عہدیداران کی تقریب حلف برداری کا انعقاد قومی زرعی تحقیقاتی مرکز ، اسلام آبادمیں کیا گیا۔ نئے الیکشن کے نتائج کے مطابق ڈاکٹر طارق سلطان، صدر، ڈاکٹر رمضان علی عادل نائب صدر، روشن زادہ جنرل سیکریٹری، ڈاکٹر زاہدہ فاطمہ، جائنٹ سیکریٹری، عامر ممتاز سیکریٹری اطلاعات، طاہر ظہور چوہان فنانس سیکریٹری منتخب ہوئے ہیں۔دیگر نمائندگان میں ڈاکٹر ساجدہ تاج بھی شامل ہیں۔تقریب حلف برداری میں صاحبزادہ محبوب سلطان، وفاقی وزیر برائے غذائی تحفظ و تحقیق ، اسلام آباد نے بطور مہمان خصوصی شرکت ہیں۔ حلف برداری کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صاحبزادہ

محبوب سلطان نے کہا کہ وہ امید کرتے ہیں کہ پارسا کے نئے نمائندے ادارے اور ملازمین کی مجموعی بہتری کے لئے ہمہ وقت کوشاں رہیں گے۔نو منتخب پارسا نے اپنے دورانیہ کا آغاز ہی زرعی تحقیق میں نمایاں کارکردگی دکھانے والے ائنسدانوں کی حوصلہ افزائی کے لئے سائنس ایوارڈ کے اعلان سے کیا ہے۔ کونسل کے سائنسدان ملک کا قیمتی سرمایہ ہے۔ ضرورت اس بات کی ہے محنت اور لگن کو اپنا شعار بنایا جائے تا کہ ملک زرعی خود الت کی منزل کی جانب گامزن ہو۔ ہمارا ملک بنیادی غذائی تحفظ کی منزل حاصل کر چکا ہے اور ہمارے پاس ملکی ضروریات کے مطابق گندم، چاول، چینی اور دیگر اجناس موجود ہیںجو کہ جدید زرعی تحقیق و ترقی کے ثمرات ہیں۔اس سلسلے میں پی اے آر سی کے سائنسدانوں کی کاوشیں قابل تحسین ہیں۔زراعت کی ترقی وزیر اعظم پاکستان عمران خان کی اولین ترجیحات میں شامل یں۔ملک میں زرعی ایمرجنسی کا نفاذ ہماری حکومت کی اس پالیسی اور وژن کی ایک مثال ہے نیز زرعی ایمرجنسی کی پالیسی کے تحت ہم اربوں روپے زرعی تحقیق و ترقی پر خرچ کر رہے ہیں۔زرعی تحقیقاتی کونسل کو اس کے 1300بلین سے زائد کے بجٹ برائے سال 2018-19کی مکمل فراہمی یقینی بنائی جائے گی۔ کونسل کے ذمہ مالی واجبات کی فراہمی کو ترجیحی بنیادوں پر حل کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے۔ ڈاکٹر منیر احمد ، چیئر مین ، پاکستان زرعی تحقیقاتی کونسل نے اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پارسا کے نئے نمائندوں سے توقع کی جاتی ہے کہ وہ نہایت دیانتداری اور دل جمعی سے اپنے فرائض اور ذمہ داریاں انجام دیں اور ملکی زراعت و خوشحالی میں ایک قائدانہ کردار ادا کریںاور مستقل بنیادوں پر غذائی تحفظ کو یقینی بنائیں۔ ہمیں مشتر کہ کاوشوں کے ریعے پاکستانی زراعت کو ترقی دے کر ملک کو کثیر آبادی

کو خوشحالی سے ہمکنار کر سکتے ہیں۔ڈاکٹر طارق سلطان نئے منتخب صدر نے اس موقع پر کہا کہ الیکشن میں کامیابی پر وہ اللہ کے شکر گزار ہیں۔ ان کے ایسوسی ایشن ادارے کی ترقی کے لئے دن رات کام کرے گی ۔ زرعی سائنسدانوں کی مشکلات کے ازالے کے لئے ان کی ایسو سی ایشن ہر ممکن اقدام کرے گے ۔ انہوں نے نئی منتخب ہونے والی تمام نمائندوں کو الیکشن جیتنے پر مبارکباد پیش کی اور محنت اور لگن کے ساتھ ادارے کی خدمت اور سائنسدانوں کی خدمت جاری رکھنے کے لئے تلقین کی۔انہوں نے کونسل کے ملازمین کے لئے 2018کے بجٹ میں کئے گئے اضافے کی ادائیگی کے مسئلے کو ترجیحی بنیادوں پر حل کرنے پر زور دیا۔ڈاکٹر روشن زادہ، جنرل سیکریٹری(پارسا) نے کہا کہ جدید ٹیکنالوجی اور نت نئے طریقوں پر عمل پیرا ہو کر ہی ادارے کو استحکام اور ملکی معیشت کو ترقی دی جاسکتی ہے ۔ کونسل کی بہتری کے لئے ان کی ایسو سی ایشن دن رات کام کرنے کی لگن رکھتی ہے۔ پاکستان کے لوگوں کا بنیادی ذریعہ معاش زراعت ہے اس لئے ملک میں زراعت کی ترقی سے لوگوں کا معیار زندگی بلند کیا جا سکتاہے۔ تقریب کے اختتام پر ڈاکٹر غلام محمد علی، ڈائریکٹر جنرل ، قومی زرعی تحقیقاتی مرکز نے تمام معزز مہمانوںکا شکریہ ادا کیا۔