’’آئینہ انکو دکھایا تو برا مان گئے ‘‘حقائق لکھنے کی پاداش میں سینٹورس مال کے مالک سردار تنویر الیاس کا صحافی بابرعباسی کیخلاف جارحانہ اقدام

اسلام آباد(نمائندہ خصوصی)تجاوزات اور غیر قانونی ہائوسنگ سکیم و مبینہ گھپلوں کے حوالے سے انکشافات لکھنے پر سنٹورس مال کے مالک سردار تنویر الیاس نے نوجوان صحافی بابر انور عباسی کیخلاف ایف آئی اے سے رجوع کر لیا، تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی چینل سے وابستہ نوجوان صحافی بابر انور عباسی نے سردار تنویر الیاس کی مبینہ غیر قانونی ہائوسنگ سوسائٹی کیخلاف آواز اٹھائی تو مذکورہ بزنس آئیکون کی جانب سے انہیں شدید دبائو، دھمکیوں اور دیگر اوچھے ہتھکنڈوںسے ڈرایا گیا۔جب اس سے بات نہ بن سکی تو سردار تنویر الیاس خان نے صحافی پر دبائو ڈالنے کے لیے پہلے لیگل نوٹس جاری کیا جس پر صحافی نے جواب دیتے ہوئے انکے تمام الزامات کو مسترد کرتے ہوئے حقائق کے منافی قرار دیا اور وکیل کے ذریعے الزامات سے بھر پور چھ ارب روپے کے ہرجانے کا نوٹس جاری کرنے پر صحافی نے جوابا لیگل نو ٹس جاری کیا ، نوجوان صحافی نے تنویر الیاس

کے لیگل نوٹس کے جواب میں انکو کہا کہ آپ نے اپنے وکیل کو مکمل حقائق سے آگاہ نہیں کیا انہوں نے کوئی ایسی چیز شائع نہیں کی جو حقائق کے منافی ہو ،وہ اپنی لکھی تحریر کے ثبوت ہر متعلقہ فورم پر پیش کر سکتے ہیں، صحافی بابر عباسی کی جانب سے تنویر الیاس کو مبینہ طور پر جھوٹے من گھڑت الزمات لگانے پر 12 ارب روپے ہرجانے کا نوٹس بھی جاری کیا گیا ہے ، نوٹس جاری ہوتے ہی دوسرے دن ایف آئی اے کی جانب سے صحافی کو طلب کر لیا گیا ہے،ایف آئی اے سائبر کرائم سیل اسلام آباد نے صحافی سے 22 مئی کو رابطہ کیااور کہا کہ انکے کیخلاف سردار تنویر الیاس نے درخواست دائر کی ہے جس سے متعلق پوچھ گچھ کرنی ہے لہٰذا کل وہ ایف آئی اے اسلام آباد کے جی ایٹ میں واقع دفتر میں پیش ہو کر اپنا بیان ریکارڈ کرائیں۔نوجوان صحافی بابر انور عباسی کیخلاف اوچھے ہتھکنڈوں کا استعمال کرتے ہوئےخاموش کروانے کی کوشش پر مختلف صحافتی حلقوں نے تشویش کا اظہار کیا ہے۔