ہمیں تو عمران خان کے دورہ امریکہ کا علم ہی نہیں، روس کے بعد امریکہ نے بھی ایسا اعلان کردیا کہ تبدیلی سرکار اپنا سامنہ لیکر رہ گئی

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) امریکی محکمہ خارجہ نے وزیراعظم عمران خان کے دورہ امریکہ سے متعلق لاعلمی کا اظہار کر دیا۔میڈیا رپورٹس کے مطابق ترجمان امریکہ وزارت خارجہ مورگن اورٹیگس کا کہنا ہے کہ عمران خان کے دورہ امریکہ کی اطلاع نہیں ملی۔وائٹ ہاؤس سے رابطہ کر کے دورے کی تفصیلات لیں گے۔ترجمان کا کہنا ہے کہ وائٹ ہاؤس نے عمران خان کے دورے سے متعلق آگاہ نہیں کیا،جب کہ دوسری جانب وائٹ ہاؤس نے وزیراعظم عمران خان کے دورہ امریکہ کی تصدیق کر دی ہے۔وائٹ ہاؤس ذرائع کے مطابق وزیراعظم عمران خان کا ا مریکہ کا دورہ طے شدہ ہے۔خیال رہے وزیراعظم کے دورہ امریکا کی حتمی تاریخ

کا اعلان کر دیا گیا، عمران خان 4 روزہ دورے کے سلسلے میں 20 جولائی کو امریکا کیلئے روانہ ہوں گے، امریکی صدرڈونلڈ ٹرمپ سے 22 جولائی کو ملاقات ہونے کا امکان ہے۔تفصیلات کے مطابق وزیراعظم کے مشیر خاص نعیم الحق کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ عمران خان 20 جولائی کو امریکا کیلئے روانہ ہوں گے۔وزیراعظم کا دورہ امریکا 4 روز پر محیط ہوگا۔ جبکہ وزیراعظم 24 جولائی کوپاکستان واپس آئیں گے۔ دوسری جانب اس حوالے سے وزیرداخلہ شاہ محمود قریشی نے بتایا ہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے وزیراعظم عمران خان کوامریکہ کے دورے کی دعوت دی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ وزیراعظم عمران خان آئندہ ماہ دورے پر امریکہ جائیں گے۔ شاہ محمود قریشی نے بتایا ہے کہ دونوں ممالک نے مل کر ایک ایجنڈے پر بات کرنے پر اتفاق کیا ہے۔جب کہ دفتر خارجہ کے ترجمان ڈاکٹر محمد فیصل نے کہا ہے کہ وزیراعظم عمران خان 22 مئی کوامریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ سے ملاقات کریں گے۔اسلام آباد میں ہفتہ وار میڈیا بریفنگ کے دوران ڈاکٹر محمد فیصل نے بتایا کہ امریکی صدر کی دعوت پر وزیر اعظم عمران خان واشنگٹن کا دورہ کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ دورے میں دونوں ممالک کے تعلقات کو مزید بہتر بنانے پر توجہ مرکوز کی جائے گی، وزیراعظم امریکی صدر ٹرمپ سے اہم ملاقات کریں گے۔ترجماندفتر خارجہ کا کہنا تھا کہ سفارتی سطح پر وزیر اعظم کے دورے کا ایجنڈا طے کیا جا رہا ہے۔ پاکستان اور امریکہ کے مابین تعلقات معمول پرآرہے ہیں ، دونوں ممالک نے جنوبی ایشیاء اور خطے میں امن واستحکام کیلئے مشترکہ کوشش جاری ہے، افغانستان میں قیام امن کیلئے پاکستان نے مثبت کردار ادا کیا ہے اور پاکستان افغانستان میں امن کا حامی ہے۔