وزیراعظم کا شیخ رشید کو وزیر ریلوے بنانے کا فیصلہ غلط ثابت ،بات استعفے تک جاپہنچی

اسلام آباد (نیوز ڈیسک)پاکستان پیپلز پارٹی کےچیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے صادق آباد ٹرین حادثے میں قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع پر دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ہے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق بلاول بھٹو نے کہا کہ ٹرین حادثوں پر وزیر کے مستعفی ہونے کی مثالیں دینے والے عمران خان اپنے وزیر سے استعفیٰ مانفیں گے؟ انہوں نے کہا شیخ رشید کا وزارت سے رومانس ٹرین حادثوں میں نجانے کتنی انسانی زندگیاں نگلتا چلا جائے گا۔بلاول بھٹو نے کہا یہ متاثرہ خاندانوں کے لیے قیامت کی گھڑی ہے،ٹرین حادثے اب معمول بنتے جا رہے ہیں اور وزیرِ ریلوے کچھ نہیں کر رپا رہے۔شیخ رشید بظاہر حادثوں کے مکمل ذمہ دار ہیں لہذا ان کے خلاف انکوائری ہونی چاہئیے۔بلاول بھٹو نے کہا کہ انکوائری پوری ہونے تک شیخ رشید کو چاہئیے کہ وہ وزارت سے مستعفی ہو جائیں،بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ عمران خان نے بڑے فخر کے ساتھ شیخ رشید کو ریلوے کی وزارت

دی تھی لیکن آج خان صاحب کا یہ فیصلہ بھی غلط ثابت ہو گیا۔عوام کی آنکھوں میں دھول جھوکنے کے لیے عمران خان اور شیخ رشید نے مل کر کئی ٹرینوں کا افتتاح کیا۔مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف نے بھی ولہار ریلوے اسٹیشن پر ہونے والے ٹرین حادثے پر افسوس کا اظہار کیا اور کہا کہ’ ٹرینوں کے پے درپے حادثات انتہائی تشویشناک ہیں’۔انہوں نے کمزور ریلوے ٹریک اور ناقص منصوبہ بندی کو حادثات کا سبب بتاتے ہوئے ‘حادثے کے ذمہ داران کا تعین کرکے ان کے خلاف کارروائی کرنے کا مطالبہ کیا۔پاکستان مسلم لیگ (ن) کی رہنما مریم نواز نے بھی ریلوے حادثے میں قیمتی جانوں کے ضیاع پر افسوس اور غم زدہ خاندانوں سے اظہار تعزیت کی اور کہ ‘غلط ترجیحات کی وجہ سے پاکستانیوں کو موت کا سامنا ہے’۔ان کا کہنا تھا کہ ‘لوگ مر رہے ہیں مگر کسی کو پروا نہیں، کسی کو زحمت نہیں ہے, ایسی سنگدلی پر شدید حیرت ہوتی ہے‘۔