نئے پاکستان میں یہ نہیں چلے گا، پی ٹی اے نےملک میں انٹرنیٹ پر فحش مواد روکنے کیلئے لاکھوں ویب سائٹس بند کردیں

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) پاکستان ٹیلی کمیونی کیشن اتھارٹی نے فحش اور قابل اعتراض ویب سائٹس کے خلاف آپریشن کلین اپ کا فیصلہ کرلیا۔ملک میں انٹرنیٹ پر فحش اور قابل اعتراض مواد کی روک تھام کیلئے پی ٹی اے متحرک ہوگیا۔ترجمان پی ٹی اے نے بتایا ہے کہ 8 لاکھ 26 ہزار سے زائد لنکس بلاک کردیئے ہیں۔ لنکس میں ویب سائٹس، یو آر ایل، ویڈیوز اور دیگر مواد شامل ہیں۔ ترجمان پی ٹی اے نے مزید واضح کیا کہ چائلڈ پورنو گرافی سے متعلق مواد بھی بلاک کردیا گیا ہے۔

اس کے علاوہ پی ٹی اے نے 12 ہزار سے زائد پراکسی ویب سائٹس بھی بلاک کردی ہیں۔ پی ٹی اےکے مطابق ہر نئے دن کے ساتھ ایسی نئی ویب سائٹس بن جاتی ہیں، بڑے پیمانے پر ویب سائٹس بلاک کرنے سے انٹرنیٹ کی سپیڈ بھی متاثر ہوتی ہے تاہم ویب سائٹس بلاک کرنے کے طریقہ کار میں بہتری کیلئے تمام سٹیک ہولڈرز کے ساتھ مل کر اقدامات کئے جارہے ہیں۔پی ٹی اے کا کہنا ہے کہ شہری قابل اعتراض مواد کے بارے میں اطلاع دینے میں مدد فراہم کرسکتے ہیں۔