آرٹیکل 370کی منسوخی کے بعد تحریک آزادی فیصلہ کن مرحلے میں داخل ہوگئی ہے، سردار بشیر

راولا کوٹ (پی کے نیوز) سماجی رہنما سردار بشیر نے کہا ہے کہ بھارتی حکومت کی جانب سے آئین کے آرٹیکل تین سو ستر کی منسوخی کے بعد تحریک آزادی فیصلہ کن مرحلے میں داخل ہوگئی ہے، بھارتی حکومت کی جانب سے یکترفہ اقدام کو کشمیری کبھی قبول نہیں کریں گے آرٹیکل تین سو ستر کی منسوخی کشمیر میں مسلم اکثریت کو اقلیت میں بدلنے کا منصوبہ ہے۔ کشمیری اس منصوبے کو قبول نہیں کریں گے، ان کا کہنا تھا کہ جب سے مودی برسر اقتدار آیا ہے کشمیر میں ظلم و بربریت کی انتہا ہو گئی، ہزاروں کی تعداد میں

کشمیریوں کو پیلٹ گن سے زخمی کیا گیا ہے، نوجوانوں کی بینائی چھینی گئی ہے، معصوم نوجوانوں کو دہشتگرد قرار دے کر قتل کیا گیا ہے، مودی نے کشمیریوں کی نسل کشی کا نیا منصوبہ بنایا ہے، ان کا کہنا تھا کہ تمام کشمیری لیڈر شپ کو جیل میں ڈال کر بھارت نے رات و رات یہ فیصلہ کرلیا، یہ کریڈٹ بھارتی حکومت کو جاتا ہے کہ اس نے کشمیریوں کو ایک پوائنٹ پر لا کر کھڑا کردیا ہے وہ ہے بھارت سے آزادی ، کشمیریوں کی تحریک فیصلہ کن مرحلے میں داخل ہو چکی ہے، اب واپسی کا کوئی راستہ ہے، نہ کشمیری سمجھوتہ کریں گے۔