یقین سے کہتا ہوں کہ سلیکٹڈ وزیراعظم کو اب جانا پڑے گا، بلاول بھٹو

کراچی(نیوز ڈیسک)پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو نے کہا ہے کہ اگلے سال تک نیاوزیراعظم اور نئے انتخابات ہوں گے، یقین سے کہتا ہوں کہ سلیکٹڈ وزیراعظم کوجانا پڑے گا، حکومت کے پاس کوئی پالیسی نہیں،آئی ایم ایف کی پالیسیوں کا نقصان عوام اٹھا رہی ہے۔اسلام آباد میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے چیئرمین پی پی پی بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا کہ جب سے کٹھ پتلی حکومت آئی ہے ہماری معاشی صورتحال بدترین ہوگئی ہے، حکومت کے پاس کوئی معاشی پالیسی نہیں ہے اور حکومتی نااہلی کا بوجھ عوام اٹھارہےہیں، وزیراعظم عمران خان کو جانا ہوگا، وہ نہیں رہیں گے اور اگلے سال ہمارا نیا وزیراعظم ہوگا۔

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ ہم سول نافرمانی کیلئےمولانا کی حمایت نہیں کریں گے، جےیو آئی ف کےپلان بی پر پی پی پی کی قیادت اور اپوزیشن کی رہبرکمیٹی کوتفصیل سےنہیں بتایاگیا، جےیو آئی ف نےچودھری شجاعت اورپرویزالہٰی سے ملاقاتوں سےمتعلق بھی نہیں بتایا، پلان بی اورسی کی تفصیلات ملےبغیراس کی حمایت پربات نہیں کر سکتا۔بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں ایک تاریخی حملہ ہوا ہےا ور ایک سو چار دن سے کشمیری بہن بھائیوں کو ایک کھلی جیل میں رکھا گیاہے، کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے لئے اس مرتبہ پاکستان پیپلزپارٹی کا یوم تاسیس آزاد کشمیر میں ہوگا۔