وزارت اطلاعات کا قلمدان مجھے سے واپس لیکر فیاض الحسن چوہان کو کیوں دیا گیا، اسلم اقبال نے بتادیا

لاہور(نیوز ڈیسک)صوبائی وزیرمیاں اسلم اقبال نے فیاض الحسن چوہان کی بطور وزیراطلاعات پنجاب مقرر کرنے پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ مجھے وزارت اطلاعات کا قلمدان عارضی طورپردیاگیاتھا،ان کا کہنا تھا کہ میرے پاس پہلے ہی 6سے7محکمے ہیں۔یاد رہے کہ فیاض الحسن چوہان کو اقلیتوں کے بار میں متنازع بیان پر اطلاعات کا قلمدان واپس لے لیاتھا۔واضح رہے کہ کچھ دیر قبل پاکستان تحریک انصاف کے رہنما فیاض الحسن چوہان کو دوبارہ وزیر اطلاعات بنا دیا گیا۔ باقاعدہ نوٹیفیکیشن بھی جاری کر دیا گیا ہے۔بتایا گیا ہے کہ پنجاب کے وزیر انڈسٹریز میاں اسلم اقبال نے اطلاعات کے محکمہ کی ذمہ داریوں سے معذرت کر لی تھی۔ان کا کہنا ہے کہ حقلے کی مصروفیات کے باعث دو وزارتوں کے ساتھ انصاف

نہیں کر سکتا اس وجہ سے محکمہ اطلاعات کی ذمہ داریوں سے معذرت کر لی۔اطلاعات کے محکمے کی اضافی ذمے داریاں چوھڑنے سے متعلق وزیراعلیٰ کو اطلاع دی۔جس کے بعد فیاض الحسن چوہان کو دوبارہ وزیر اطلاعات پنجاب بنا دیا گیا ہے۔خیال رہے کہ گزشتہ رمضان المبارک کے دوران بھی سابق وزیر اطلاعات نے دعویٰ کیا تھا کہ وہ عید کے بعد واپس آ رہے ہیں، انہوں نے کہا تھا کہ میرے خلاف سازش ہوئی لیکن سازشیوں کا نام نہیں بتاؤں گا، جنہوں نے مٹھائیاں بانٹیں، وہی اُگلیں گے۔ایک میڈیا چینل سے بات کے دوران اُنہوں نے مزید یہ بھی کہا تھا کہ میں فرنٹ فٹ پر کھیلتا ہوں اس لیے مخالفت ہوتی ہے۔ اس بیان کے دو روز بعد ہی اُنہیں حکومت پنجاب نے اپنا ترجمان مقرر کر دیا تھا۔