پندرہ دنوں میں تیسری کوشش ناکام،رات کی تاریکی میں اگنی 3کا تجربہ بھی ناکام رہا

نئی دہلی(نیوز ڈیسک) بھارتی فوج کو ایک بار پھر سبکی کا سامنا کرنا پڑ گیا، اگنی تھری میزائل کا تجربہ بھی ناکام ہو گیا۔غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق اگنی تھری میزائل کا تجربہ رات کے وقت کیا گیا، زمین سے زمین تک مارکرنے والا بھارتی میزائل ڈمی پے لوڈ سے لیس تھا، کسی بھی بھارتی میزائل کا یہ تیسرانائٹ ٹرائل تھا۔خبر رساں ادارے کے مطابق تباہ ہونے سے پہلے میزائل 115 کلو میٹر کا فاصلہ طے کرسکا، اگنی تھری کو 2800 کلو میٹرتک مار کرنے کے لیے ڈیزائن کیا گیا تھا، اس سے قبل اگنی ون اوراگنی ٹو کے میزائل تجربات بھی ناکامی سے دوچار ہو چکے ہیں۔خیال رہے بھارت نے گذشہ ماہ رات میں

جوہری میزائل “اگنی 2” کے کامیاب تجربے کا دعویٰ کیا تھا۔قومی اخبار میں شائع ایک رپورٹ کے مطابق بھارت نے رات میں جوہری میزائل “اگنی 2” کا کامیاب تجربہ کرنے کا دعویٰ کیا ۔بھارتی میڈیا کے مطابق حکام نے نام ظاہر کرنے کی شرط پر بتایا تھا کہ اڈیسہ کے ساحل سے قریب واقع ڈاکٹر عبدالکلام جزیرے پر رات ساڑھے 7 بجے جوہری صلاحیت کے حامل “اگنی 2” کا تجربہ کیا گیا۔حکام کے مطابق زمین سے زمین پر مار کرنے والا میزائل 1500کلومیٹر دور ہدف کو نشانہ بنانے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ گذشہ ماہ بھی بھارت کی جانب سے براہموس سوپر سانک میزائل کا تجربہ کیا گیا تھا۔ بھارتی میڈیا کا دعویٰ تھا کہ براہموس سوپر سانک میزائل تجربہ کامیاب رہا۔ بتایا گیا تھا کہ میزائل کا تجربہ بھارتی ریا اڑیسہ میں کیا گیا۔ بھارت نے کچھ عرصہ قبل بھی براہموس سپر سانک میزائل کا تجربہ کیا تھا۔یہ تجربہ بھارتی ریاست راجھستان میں کیا گیا تھا۔بھارت کا دعویٰ ہے کہ براہموس سپر سانک میزائل ر زمین سے زمین پر مار کر سکتا ہے۔ جبکہ اسے سمندر سے آبدوز کے ذریعے بھی داغا جاسکتا ہے۔ واضح رہے کہ بھارت اپنی میزائیل ٹیکنالوجی میں مسلسل اضافہ کررہاہےاورگزشتہ کچھ عرصے سے بھارت کی جانب سے میزائل تجربات میں تیزی آئی ہے جس کی وجہ سے خطے میں ہتھیاروں کی دوڑ میں مزید تیزی آسکتی ہے۔ یہاں یہ بھی واضح رہے کہ بھارت کی تمام تر کوششوں کے باوجود اس وقت پاکستان کا میزائل نظام بھارت کے میزائلوں سے کہیں زیادہ بہتر تصور کیا جاتا ہے۔