طیب اردوان شریف خاندان کو ریلیف دلانے میں کیا کردار اداکرسکتے ہیں، جانئے

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) معروف صحافی عارف نظامی کا کہنا ہے کہ ترک صدر شریف خاندان کو ریلیف دلوانے میں کردار ادا کر سکتے ہیں۔تفصیلات کے مطابق ترک صدر طیب اردوان اس وقت دورہ پاکستان پر ہیں،ترک صدر اور شریف خاندان میں گہرے تعلقات ہیں،ماضی میں یہ خبریں گردش کرتی رہیں کہ شریف خاندان کو ریلیف دلوانے کے لیے طیب اردوان اہم کردار ادا کرسکتے ہیں۔اس حوالے سے تجزیہ پیش کرتے ہوئے معروف صحافی عارف نظامی کا کہنا ہے کہ ترکی اور ملائیشیا وہ دو ممالک ہیں جنہوں نے کشمیر کے معاملے پر پاکستان کی حمایت کی۔انہوں نے اس حوالے سے نقصان کی بھی پرواہ نہیں کی۔

عارف نظامی نے مزید کہا کہ طیب اردوان کا شریف فیملی سے گہرا تعلق ہے۔ہو سکتا ہے کہ ترک صدر شریف خاندان کو کچھ ریلیف دلانے میں کوئی کردار ادا کریں تاہم عمران خان کہتے ہیں کہ وہ احتساب پر کبھی سمجھوتا نہیں کریں گے۔انہوں نے مزید کہا کہ اگر مریم نواز باہر جانا چاہتی ہیں تو انہیں جانے دیا جائے۔واضح رہے کہ کچھ عرصہ قبل یہ خبریں سامنے آئی تھیں کہ ترکی کے صدر طیب اردگان نے شریف خاندان کو ریلیف دلوانے کیلئے وزیراعظم عمران خان سے رابطہ کیا تھا۔ شریف خاندان اور ترک صدر کے خاندان کے درمیان قریبی تعلقات قائم ہیں، اسی لیے دعویٰ کیا گیا کہ طیب اردگان نے شریف خاندان کو ریلیف دلوانے کی کوشش کی ہے۔تاہم اس حوالے سے وزیراعظم عمران خان نے خود وضاحت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایسا کچھ نہیں ہوا۔ وزیراعظم کا کہنا ہے کہ خدشہ تھا کہ ترک صدر شریف خاندان کو ریلیف دلوانے کی سفارش کریں گے تاہم انہوں نے ایسا کبھی نہیں کیا۔وزیراعظم نے یہ بھی کہا تھا کہ اطلاع ہے شریف فیملی میں سے کسی نے عرب ملک کے سربراہ سے رابطہ کیا ہے۔ لیکن عرب ملک کے سربراہ نے کہا کہ پاکستان کا اندرونی معاملہ ہے۔ وزیراعظم نے دوٹوک الفاظ میں کہا کہ این آر او کسی صورت نہیں ہوگا جتنے مرضی رابطے کرلیں۔