ایف اے ٹی ایف نے پاکستان کے حق میں اعلامیہ جاری کردیا

پیرس (نیوز ڈیسک)بھارت کی سازشیں ناکام ہو گئیں، ایف اے ٹی ایف نے پاکستان کے حق میں اعلامیہ جاری کر دیا، پاکستان نے سفارشات پر عمل کیا اس لیے بلیک لسٹ میں شامل نہیں کیا جائے گا، جون تک مزید اقدامات کر کے گرے لسٹ سے نام نکلوایا جا سکتا ہے۔ تفصیلات کے مطابق ایف اے ٹی ایف نے پاکستان کی کارکردگی سے متعلق جائزہ اجلاس کا اعلامیہ جاری کر دیا ہے۔ایف اے ٹی ایف کی جانب سے جاری کیے گئے اعلامیہ میں اعلان کیا گیا ہے کہ پاکستان نے اضافی سفارشات پر عملدرآمد کیا، اس لیے بلیک لسٹ میں نام شامل کیے جانے کا خطرہ ٹل گیا۔ پیرس میں ہوئے اجلاس کے دوران پاکستان کی طرف سے ایکشن پلان پر عملدرآمد کا جائزہ لیا گیا۔ کہا گیا ہے کہ پاکستان نے ایکشن پلان پرعملدرآمدپر خاطرخواہ پیشرفت کی۔پاکستان نے ایف اے ٹی ایف کے اضافی 9 سفارشات پر عملدرآمد کیا۔ایف اے ٹی ایف نے اعلان کیا ہے کہ پاکستان کو مزید 4 ماہ کیلئے جون 2020 تک گرے لسٹ میں رکھا جائے گا۔

جون تک پاکستان مزید سفارشات پر عملدآرمد کر کے گرے لسٹ بھی نکل سکتا ہے۔ پاکستان نے ایف اے ٹی ایف کے اعلامیہ کے بعد دوست ممالک کا خصوصی شکریہ ادا کیا ہے۔ چین، ترکی اور ملائیشیا کی حمایت کے باعث پاکستان کو بلیک لسٹ میں شامل کروانے کی بھارتی سازش ناکام ہوئی۔مزید بتایا گیا ہے کہ پاکستان کو گرے لسٹ سے نکلنے کیلئے اس وقت چین ،ترکی ،ملائیشیا ،سعودی عرب اور خلیجی ممالک کا ووٹ حاصل ہے، تاہم گرے لسٹ سے نکلنے کے لیے مزید 7 ووٹ درکار ہیں۔ واضح رہے کہ گزشتہ ماہ ایف اے ٹی ایف حکام کے بیجنگ اجلاس میں پاکستان کو اس وقت بڑی کامیابی حاصل ہوئی تھی جب بھارت کی تمام تر سازشوں کے باوجود بیشتر ممالک نے پاکستان کی کارکردگی کو سراہا تھا۔ پاکستان ایف اے ٹی ایف کی جانب سے دیے گئے بیشتر ٹاسک پورے کرنے میں کامیاب رہا ہے، جس کے بعد سے پاکستان کو جون کے ماہ تک گرے لسٹ سے نکالنے کیلئے سنجیدگی سے غور کیا جا رہا ہے۔