ایم پی اے شہناز انصاری کی بیٹی کا سیاست میں آنے کا اعلان

کراچی (نیوز ڈیسک) مقتولہ رکن سندھ اسمبلی شہناز انصاری کی بیٹی ڈاکٹر فاطمہ نے سیاست میں آنے کا اعلان کردیاہے ۔ نوشہرو فیروز میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹر فاطمہ نے کہا کہ ماں کا مشن آگے چلانا چاہتی ہوں، پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری سمیت پارٹی رہنماؤں کی شکر گزار ہوں، جنہوں نے مجھے سپورٹ کیا۔ اپنی بہادر ماں کی طرح غریب عوام کی خدمت کرکے والدہ کا نام روشن کروں گی۔جب کہ رکن سندھ اسمبلی مقتولہ شہناز انصاری کے شوہر حمید انصاری نے کہا ہے کہ پیپلزپارٹی کی حکومت ہونے کے باوجود میری بیوی کوقتل کردیا گیا، چار روزقبل ایس ایس پی کو سکیورٹی

کیلئے درخواست دی تھی، سکیورٹی دی جاتی تو قتل کی واردات نہ ہوتی،میری بیوی کو بیدردی سے قتل کیا گیا، قاتلوں کو فوری گرفتار کیا جائے۔ انہوں نے اپنی بیوی رکن سندھ اسمبلی مقتولہ شہناز انصاری کے قتل پر اپنے ردعمل میں کہا کہ چار روز قبل ایس ایس پی سکیورٹی کو تحفظ دینے اور سکیورٹی دینے کیلئے درخواست دی تھی لیکن عمل نہیں کیا گیا، بتایا گیا ہے کہ رکن سندھ اسمبلی مقتولہ شہناز انصاری نے تحریری خط وزیراعلیٰ سندھ، اسپیکر سندھ اسمبلی ، اور سیشن جج نوشہروفیروز کوبھی ارسال کیا گیا تھا۔مقتولہ شہناز انصاری نے گزشتہ دنوں سکیورٹی کیلئے ایس ایس پی کوبھی خط بھی لکھا تھا۔