اب تک شادی کیوں نہیں کی، مداح کے سوال پر صبا قمر کا دلچسپ جواب

اسلام آباد(ویب ڈیسک)صبا قمرنے ابھی تک شادی نہ کرنے کی وجہ بتا دی۔ اداکارہ نے گزشتہ روز اپنے فالوورز کیلئے ٹوئٹر پران کے پوچھے گئے سوالات کے جوابات دیے۔گزشتہ روز اپنی ٹویٹ میں صبا نے بتایا کہ وہ فالوورز کے سوالات کے جوابات دیں گی جس کے بعد ان کے مداحوں کی ایک بڑی تعداد نے سوالات کی بھرمارکردی۔ایک صارف نے پوچھا کہ میں جاننا چاہتا ہوں کہ آپ نے ابھی تک شادی کیوں نہیں کی؟ جواب میں صبا نے لکھا ” ابھی تک ایسا کوئی ملا نہیں جس کے ساتھ میں اپنی پوری زندگی گزار سکوں”۔ایک صارف نے پوچھا شہرت ملنے کے بعد بہت سی سیلبرٹیز میں غرورآجاتا ہے، انڈسٹری میں اتنے سال کام

کرنے کے بعد بھی آپ اپنا وقار اور مہربان رویہ کیسے برقرار رکھے ہوئے ہیں؟ نئے آنے والوں کیلئے بھی کچھ تجاویز دیں۔ جس پر صبانے شکریہ ادا کرتے ہوئے لکھا کہ واحد ٹِپ یہ ہے کہ مثبت اور مہربان رہیں۔صبا قمر سے پوچھا گیا کہ وہ ذہنی صحت برقرار رکھنے کیلئے کیا کرتی ہیں اور ذہنی دباؤ کا شکار افراد کو کیا مشورہ دیں گی؟۔اداکارہ نے واضح کیا کہ میں ایسے بہت سے مسائل سے گزری ہوں اور زندگی میں یہ سیکھا کہ ایسی چیزوں کو بہت سنجیدگی سے نہ لیں اور اپنے آپ کے ساتھ سچے رہیں۔مستقبل کے ارادوں پر صبا قمر نے لکھا “بڑے منصوبے، انشاء اللہ”۔بھارت سے ایک پرستار کے سوال پر صبا نے بتایا کہ وہ ڈرامہ میں کام کرنے کی خواہش رکھتی تھیں لیکن فی الحال فلموں میں کام کررہی ہیں جبکہ ویب سیریز بھی جلد آنے والی ہے۔یوٹیوب چینل لانچ کرنے سے متعلق سوال پرصبا نے لکھا کہ وہ اپنی سالگرہ پر یو ٹیوب چینل لانچ کریں گی۔ایک صارف کی جانب سے گھر آنے کی خواہش کے اظہار پر صبا قمر نے ہنستے ہوئے لکھا کہ اس کیلئے آٌپ کو میری والدہ سے اجازت لینا ہوگی ، وہ کافی سخت ہیں۔ جواب میں ایک خاتون صارف نے لکھا کہ “لیکن اگرمیں آؤں تو انہیں کوئی مسئلہ نہیں ہوگا”۔اداکارہ نے مداح کو بتایا کہ پسندیدہ آئسکریم چاکلیٹ فلیورہے۔صبا قمر کے 2 معروف ڈرا موں “چیخ” اور “باغی” میں سے پسندیدہ سے متعلق پوچھنے پر اداکارہ نے کہا کہ دونوں میرے بچوں جیسے ہیں، کسی ایک کا انتخاب نہیں کرسکتی۔سجل اور احد سے متعلق سوال پرصبا نے لکھا کہ وہ دونوں ایک دوسرے کیلئے بنے ہیں، ان کیلئے بہت سا پیار اور دعائیں۔اداکارہ کی آنے والی فلم “کملی ” ہے جس کے ڈایئریکٹر سرمد کھوسٹ ہیں، فلم کو عیدالفطرپرریلیز کرنے کااعلان کیا گیا ہے۔