ڈیل عظمیٰ خان نےکی اس میں میرا کوئی حصہ نہیں، حسان نیازی

لاہور(نیوز ڈیسک)بیرسٹر حسان نیازی نے کہا ہے کہ عظمیٰ خان نے ڈیل کی تاہم میں اس کا حصہ نہیں ہوں، میں سی سی پی او آفس میں لڑرہا تھا ، اداکارہ عظمیٰ خان اور ان کی بہن کیلئے جدوجہد کر رہا تھا معلوم نہیں تھا اسی وقت عظمیٰ ڈیل کررہی ہیں۔ اس تمام تر معاملے کے بعد میں نے امید کو نہیں کھویا ، تاہم ہماری اس جدوجہد سے ایک ٹرینڈ سیٹ ہوا ہے کہ کسی کے گھر کا گیٹ نہیں پھلانگنا اور نہ ہی خواتین کے کمروں میں گھسنا ہے ، حسان نیازی نے کہا کہ قانون سے تو یہ لوگ بچ گئے ہیں تاہم اللہ کی لاٹھی سے نہیں بچ سکتے کیونکہ اللہ کی لاٹھی بہت بے آواز ہے۔مذکورہ واقعے کی کچھ ویڈیوز

سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی تھیں جس میں اداکارہ اور ان کی بہن ہما خان پر تشدد کرتے دیکھا گیا تھا۔اس کے بعد اداکارہ نے پولیس کو شکایت درج کروائی جس کی روشنی میں27 مارچ کو ملک ریاض کی بیٹیوں پشمینہ ملک، عنبر ملک اور عثمان ملک کی اہلیہ آمنہ عثمان ملک سمیت دیگر نامعلوم مسلح افراد کے خلاف مقدمہ درج کرلیا گیا تھا جو ان خواتین کے ہمراہ آئے تھے۔بعد ازاں عظمیٰ خان نے کسی بھی نوعیت کی ڈیل سے متعلق خبروں کو محض قیاس آرائیاں قرار دیا تھا۔انہوں نے کہا تھا کہ ’یہ افواہ ہیں اور اس ضمن میں کوئی ڈیل نہیں ہو رہی‘۔عظمیٰ خان نے مزید کہا تھا کہ مشتبہ افراد نے ان سے کوئی رابطہ کیا اور نہ ہی وہ کوئی ڈیل قبول کریں گی۔تاہم اب اداکارہ نے ڈیفنس سی پولیس میں ایک درخواست جمع کرائی جس میں کہا گیا کہ ’میں نے گزشتہ ہفتے غلط فہمی کی بنیاد پر مقدمہ درج کرایا تھا جس سے دستبردار ہو رہی ہوں‘۔انہوں نے کہا کہ اس معاملے میں ابھی تک کوئی چالان بھی جمع نہیں کرایا گیا۔عظمیٰ خان نے مزید کہا کہ ’میں مذکورہ معاملے میں کوئی گواہی یا بیان نہیں دینا چاہتی‘۔علاوہ ازیں انہوں نے فوجداری ضابطہ اخلاق (سی آر پی سی) کی دفعہ 164 کے تحت لاہور کینٹ عدالت کے جوڈیشل مجسٹریٹ نعمان ناصر کے سامنے بھی ایسا ہی بیان ریکارڈ کرایا کہ وہ کیس واپس لینا چاہتی ہیں۔عظمیٰ خان کی بہن ہما نے سی آر پی سی کی دفعہ 164 کے تحت درج اپنے الگ بیان میں کہا کہ ’ان کے گھر میں اس طرح کا واقعہ نہیں ہوا‘۔